Wednesday, 19 December 2018

اس ہفتےکی حدیث

پيغمبراکرم(ص) فرماتے تھے كہ :

 

فاطمہ (س) ميرے جسم كا ٹكڑا ہے جو اسے خوشنود كرے گا اس نے مجھے خوشنود كيا، اور جو شخص اسے اذيت دے گا اس نے مجھے اذيت دى سب سے عزيزترين ميرے نزديك فاطمہ (س) ہيں

 

 (مناقب ابن شہر آشوب، ج 3 ص 332)

قارئین کی تعداد

آج 12

کل 35

اس هفته 61

اس ماه 234

ٹوٹل 22075

 شامی افواج نے شمالی شہر حلب پر مکمل کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔ شامی افواج نے حلب کو دہشت گردوں کے قبضے سے آزاد کرانے کے لئے تین ہفتے قبل بھرپور آپریشن شروع کیا تھا۔ پریس ٹی وی نے خبر دی ہے کہ حکومت شام کے مخالف نام نہاد انسانی حقوق کے مرکز نے حلب پر شامی افواج کا مکمل کنٹرول ہونے کی تصدیق کر دی ہے۔ انسانی حقوق کے مرکز کے سربراہ رامی عبدالرحمن نے بتایا ہے کہ دہشت گردوں نے حلب کے مشرق میں چھے علاقوں سے پسپائی اختیار کرلی ہے۔ شام سے متعلق انسانی حقوق کے مرکز کے سربراہ نے کہا ہے کہ حلب میں شامی افواج کا آپریشن مکمل ہوگیا ہے۔ اس سے پہلے شامی ذرائع ابلاغ نے خبر دی تھی کہ حلب کے اٹھانوے فیصد علاقے آزاد کرا لئے گئے ہیں۔ شامی ذرائع کے مطابق فوج نے شیخ سعید اور الصالحین جیسے محلوں کو آزاد کرانے کے ساتھ کرم الدع اور الفردوس الجلوم کی جانب پیشقدمی شروع کر دی ہے اور دہشت گرد عناصر بڑی تعداد میں حلب سے فرار کر رہے ہیں۔ اطلاعات ہیں کہ دو ہزار سے زائد دہشت گردوں نے ہتھیار ڈال دیئے ہیں، جبکہ ایک لاکھ عام شہری حلب کے مشرقی علاقوں سے باہر نکلنے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔ ایسی اطلاعات بھی موصول ہو رہی ہیں، جن کے مطابق شہر حلب کے جنوبی علاقوں میں لوگ خوشی سے سٹرکوں پر نکل آئے ہیں، ہوائی فائرنگ کر رہے ہیں اور باغی دہشتگردوں کے خلاف شامی فوج کی شاندار فتح کا جشن منا رہے ہیں۔

 حضرت آیت الله الٰعظمی سید علی خامنہ ای نے ولادت حضرت مرسل آعظم حضرت محمد مصطفی(ص) اور حضرت امام جعفر صادق(ع) کے موقع پر ایرانی حکام ، علمائے عالم اسلام ، تیسویں اتحاد اسلامی کانفرنس کے شرکاء ، اسلامی ممالک کے سفراء اور مختلف طبقہ کی عوام سے ملاقات میں کہا: ان دِنوں علاقے میں دو ارادے ایک دوسرے کے مقابل اور روبرو ہیں ، ایک «اتحاد کا اراده» دوسرے «اختلاف کا اراده»، ان حساس حالات میں « قرآن کریم اور پیغمبر اعظم(ص) کی تعلیمات پر تکیہ و بھروسہ» عالم اسلام سے اختلافات کے خاتمہ کا بہترین راستہ اور اس بیماری کا بہترین درمان ہے ۔ رهبر انقلاب اسلامی نے حاضرین کو ولادت حضرت مرسل آعظم حضرت محمد مصطفی(ص) اور حضرت امام جعفر صادق(ع) کی مبارک باد پیش کرتے ہوئے فرمایا : حضرت مرسل آعظم(ص) کی اھمیت اس قدر زیادہ اور اہم ہے کہ پروردگار عالم نے قران کریم میں انسانوں کو اس نعمت کے دینے پر منت اور احسان جتایا ہے ۔

 رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمٰی سید علی خامنہ ای نے ایٹمی معاہدے پر عملدرآمد کے آغاز کی حالیہ کامیابی کو ایران کے ایٹمی سائنسدانوں کی انتھک محنتوں اور ایرانی قوم کی بھرپور حمایت و پشت پناہی کی مرہون منت قرار دیا ہے۔ رہبر انقلاب اسلامی نے مشرق وسطٰی کی موجودہ صورتحال کو امریکہ کے نئے مشرق وسطٰی کے منصوبے کا نتیجہ قرار دیا۔ آیت اللہ العظمٰی سید علی خامنہ ای نے پارلیمنٹ کا دسواں اور مجلس خبرگان کا پانچواں الیکشن کرانے والی کمیٹیوں، الیکشن کمیشن کے عہدیداروں اور کارکنوں سے خطاب میں ان دونوں ہی انتخابات کو بہت ہی اہم اور عظیم قرار دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ایک شاندار اور صحتمندانہ مقابلے کی اہم شرط یہ ہے کہ سبھی رائے دہندگان حتی وہ لوگ بھی جو اسلامی جمہوری نظام سے راضی نہیں ہیں، وہ بھی اپنے حق رائے دہی کا استعمال کریں۔ انہوں نے کہا کہ ایسے لوگوں کا انتخاب کرنا چاہیئے جو کرسیوں پر بیٹھنے کے بعد عوام کی خدمت اور عوام کے مفادات اور مصحلتوں کے لئے کام کریں۔ اسلامی جمہوری ایران کے سپریم لیڈر نے ایٹمی مسئلہ کے حل کے سلسلے میں صدر ڈاکٹر حسن روحانی، وزیر خارجہ محمد جواد ظریف اور ایٹمی مذاکراتی ٹیم کے دیگر ارکان کی زحمتوں کا شکریہ ادا کیا۔


 قائد انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے عید نوروز کی مناسبت سے ملاقات کے لئے آنے والے کابینہ کے ارکان، پارلیمنٹ مجلس شورائے اسلامی کی صدارتی کمیٹی کے ارکان، عدلیہ کے عہدیداران اور بعض دیگر محکموں کے حکام سے خطاب کرتے ہوئے عہدیداروں کا شکریہ ادا کیا اور مزاحمتی معیشت کے نفاذ کے لئے حکومت کی مربوط مساعی اور مشقتوں کی قدردانی کرتے ہوئے زور دیا کہ ان پالیسیوں کے نفاذ کے لئے ملک کے حکام کے درمیان یکجہتی اور ہمدلی و ہم زبانی بہت اہم ہے۔ رہبر انقلاب اسلامی نے زور دیکر کہا کہ استقامتی معیشت کی مرکزی کمان کو چاہئے کہ مجریہ اور خود محترم نائب صدر کی قیادت میں تمام محکمہ جات کا تعاون اور مدد حاصل کرے، مختلف شعبوں کی کارکردگی اور پیش قدمی پر گہری نظر رکھے اور داخلی پیداوار کی سنجیدگی کے ساتھ پشت پناہی کرتے ہوئے مزاحمتی معیشت کے تحت 'اقدام و عمل' کو عملی جامہ پہنانے کے مقصد سے ہمہ جہتی اور ہمہ گیر اقدام کی زمین ہموار کرے۔

 پاکستانی وزیراعظم نواز شریف نے سعودی عرب اور ایران کو بھائی بھائی قرار دیتے ہوئے کہا کہ اسلام آباد خطے میں موجود کشیدگی میں کمی چاہتا ہے۔ منگل کو ایران کی اعلٰی سیاسی اور عسکری قیادت سے ملاقاتوں کے بعد وزیراعظم اور ان کی ٹیم ایک عالمی کانفرنس میں شرکت کیلئے ڈیووس روانہ ہوگئے۔ نواز شریف نے آج تہران میں ایرانی صدر ڈاکٹر حسن روحانی سے ملاقات کی، جس میں دنوں رہنماؤں نے ایران سعودیہ کشیدگی کے ساتھ ساتھ دوطرفہ تعلقات پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ ملاقات میں بری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف، قومی سلامتی کے مشیر لیفٹینٹ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ اور وزیراعظم کے خصوصی معاون طارق فاطمی اور ایرانی کابینہ کے ارکان بھی شریک ہوئے۔ نواز شریف نے صدر روحانی کو خطے میں امن کیلئے پاکستان کی کوششوں سے آگاہ کیا، جس پر ایرانی صدر نے کہا کہ وہ پاکستان کی کوششوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد ڈیووس روانگی سے قبل نواز شریف نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ سعودی عرب اور ایران بھائی بھائی ہیں اور پاکستان خطے میں موجود کشیدگی میں کمی چاہتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ خوش ہیں کہ پاکستان ایک بار پھر ایران اور سعودی عرب تنازعے میں کردار ادا کر رہا ہے۔ 1997ء میں بھی ہم نے ایران اور سعودی کے درمیان تعلقات کی بحالی میں کردار ادا کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے ماضی میں ایران اور عراق کشیدگی میں بھی کلیدی کردار ادا کیا۔