Wednesday, 19 December 2018

اس ہفتےکی حدیث

پيغمبراکرم(ص) فرماتے تھے كہ :

 

فاطمہ (س) ميرے جسم كا ٹكڑا ہے جو اسے خوشنود كرے گا اس نے مجھے خوشنود كيا، اور جو شخص اسے اذيت دے گا اس نے مجھے اذيت دى سب سے عزيزترين ميرے نزديك فاطمہ (س) ہيں

 

 (مناقب ابن شہر آشوب، ج 3 ص 332)

قارئین کی تعداد

آج 12

کل 35

اس هفته 61

اس ماه 234

ٹوٹل 22075

 تفسىر نىشاپورى مىں لکھاهے:

اىک بچه صحىح وسالم اسکول سے گھر گىاجب واپس آىاتو اسے بخارتھا اور آخرکار وه بستر پر گرپڑا , جب اس سے وجه پوچھى گئى تو اس نے بتاىا:

آج مىرے استاد نے مجھے ىه آىت ىاد کرائى هے:

"يوما يجعل الولدَان شيبا" (سوره مزمل آىت ١٧)

ىعنى:"...جس دن(قىامت کا خوف) بچوں بوڑھا کردے." مىں اسى دن کے خوف کى وجه سے پرىشان هوں.

بچے نے ىه بات اپنے والد کوبتائى اور آخرکار وه مرگىا.باپ نےاپنے بىٹے کى قبر پر روتے هوئے کها:

مىرے پىارے بىٹے! تىرى پاکىزه فطرت , نرم اورصاف ستھرا دل قرآن کى اس آىت سے اس قدر متاثر هوا,حالانکه سىاه دل رکھنے والے تمهارے باپ کو اس دن کے خوف سے مرنا چاهئىے تھا.